Search | تلاش
Archives
TaemeerNews Rate Card

Ads 468x60px

Our Sponsor: Socio Reforms Society India

تعمیر نیوز آرکائیو - TaemeerNews Archive

2016-08-28 - بوقت: 01:55

ہندستانی عوام اور فوج انسانی رشتے میں ہمارے بھائی ہیں - سید علی گیلانی

Comments : 0
سری نگر
یو این آئی
علیحدگی پسند رہنما اور حریت کانفرنس کے چیئر مین سید علی گیلانی نے کہا ہے کہ ہندوستانی عوام کے ساتھ ساتھ وہاں کی فوج بھی انسانی رشتہ میں کشمیریون کے بھائی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ انہیں[فوج] کو تکلیف میں دیکھ کر بحیثیت انسان ہمیں بھی دکھ ہوتا ہے ۔ گیلانی نے سری نگر کے بادامی باغ میں واقع فوجی ہیڈ کوارٹر جاکر وہاں فوج کے ذمہ داروں کو خط دینے کے پروگرام کے مطابق اپنی رہائش گاہ کے باہر نامہ نگاروںسے بات کرتے ہوئے کہا کہ ہم بھارتی فوج کو آج پہلی بار یہاں سے نکلنے کے لئے کہہ رہے ہیں، بلکہ 2009میں ہم نے فوجی انخلاء کی باضابطہ مہم چلائی اور ایک سال میں ہم نے گو انڈیا گو بیک کے تحت بھارتی فوج کو یہاں سے چلے جانے کے لئے کہا جس حوالے سے مسرت عالم بٹ ابھی بھی جیل میں بند ہیں جنہوں نے اس میں بھرپور کردارادا کیا تھا اور آج بھی ہم بہت ہی مہذب اور اخلاقی اقدار کا پورا پورا لحاظ کرتے ہوئے ان سے یہ معدبانی درخواست کرے ہیں کہ آپ ستّر سال سے ہم لوگوں کو تمام ظلم و جبر، مراعات اور لالچ اور ہر قسم کے سبز باغ دکھا کر بھی ہمارے دلوں کو جیتنے میں ناکام رہے ہیں اور مستقبل میں بھی آپ اپنی اس مہم میں کبھی کامیاب نہیں ہوجائیں گے ۔ حریت چیئرمین نے کہا کہ ہم کوئی نیا اور انوکھا مطالبہ نہیں کررہے ہیں ،بلکہ آپ کے پہلے وزیر اعظم جواہر لال نہرو کی طر ف سے لال چوک میں لاکھوں لوگوںکی موجودگی میں کئے گئے وعدے کی یاد تازہ کررہے ہیں جس میں انہوں نے کہا تھا کہ ہم کشمیریوں کو اپنے مستقبل کا فیصلہ کرنے کا اختیار دیں گے اور یہ وعدہ کشمیریوں کے ساتھ ہی نہیں بلکہ پوری دنیا کے ساتھ ہے ۔ انہو ں نے کہا کہ آنجہانی نہرو نے یہ بھی کہ اتھا کہ ہم جبری شادیوں کے قائل نہیں ہیں ۔ گیلانی نے کہا بھارت کی پارلیمنٹ1952ء میں ہمارے حق خود ارادیت کو تسلیم کرچکی ہے لیکن آج ستّر سال گزرنے کے بعد بھی بھارت اپنی ضد، ہٹ دھرمی اور توسیع پسندانہ عزائم کی تکمیل کے جنون سے عاری ہوکر ایک نہتے قوم کو وہی حق مانگنے پر تہہ تیغ کرتی ہے۔ انہوں نے کہا بھارت ایک ہاری ہوئی جنگ لڑ رہا ہے ۔ اسی لئے اس عوامی تحریک کو کچلنے کے لئے وہ اپنے تمام اسلحہ خانوں کے دھانے کھول کر آلہ قتل پر تحقیق کرتی ہے ۔ وہ اس عوامی سیلاب کو روکنے کے لئے کبھی بندوق کی گولی، کبھی پیلیٹ گن، کبی پیپر گن کبھی ٹیئر گیس اور اب پاوا گنوں کا استعمال شروع کرنے کا تجربہ ہم نہتوں پر کرتے ہیں ۔ لیکن ہم بھارتی فوجیوں کے ساتھ ساتھ ان کے حکمرانوں کو بھی بتانا چاہتے ہیں کہ آپ کا کوئی ظلم، کوئی جبر ، کوئی ہتھیار، کوئی نسخہ اور کوئی منت سماعت ہمیں اپنی منزل سے دور نہیں کرسکتی۔

Indian people, armed forces our brothers: Geelani

0 comments:

Post a Comment