Search | تلاش
Archives
TaemeerNews Rate Card

Ads 468x60px

Our Sponsor: Socio Reforms Society India

تعمیر نیوز آرکائیو - TaemeerNews Archive

2016-10-25 - بوقت: 12:17

حکومت حج کوٹہ میں اضافہ کے لئے کوشاں - مختار عباس نقوی

Comments : 0
ممبئی
پی ٹی آئی
مرکزی مملکتی وزیر اقلیتی امور مختار عباس نقوی نے آج کہا کہمرکزی حکومت عوام کو شفافیت کے ساتھ سہولت فراہم کرنے کے لئے آئندہ سال حج درخواستوں کو آج لائن کرنے کی حوصلہ افزائی کرے گی۔ ممبئی کے حج ہاؤس میں حج کمیٹی آف انڈیا اور ریاستی حج کمیٹیوں کے صدور نشین اور ایکزیکٹیو عہدیداران کے اجلاس کا افتتاح کرتے ہوئے کہا کہ مرکزی حکومت حج2017ء کے لئے سفر حج پر جانے والے خواہش مندوں کی طرف سے آن لائن درخواست کے نظام کو فروغ دے رہی ہے تاکہ صاف شفاف طریقے پر لوگوں کو سفر حج کا موقع مل سکے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت حج کوٹہ میں اضافہ کے لئے کام کررہی ہے کیونکہ عازمین حج کی ایک بڑی تعداد حج کو نہیں جاسکی ۔ نقوی نے بتایا کہ سال2016 کے دوران تقریباً45843آن لائن حج درخواستیں وصول ہوئی تھیں جومجموعی درخواستوں کا تقریبا11فیصد تھا۔ سب سے زیادہ10960آن لائن درخواستیں مہاراشٹر سے وصول ہوئی تھیں۔ انہوں نے بتایا کہ9257ان لائن درخواستیں کیرالہ سے،5407اتر پردیش سے،2983تلنگانہ سے2426جموں و کشمیر سے2425گجرات سے آن لائن درخواستیں موصول ہوئی تھیں۔ انہوں نے بتایا کہ ہماری کوشش ہے کہ اس مرتبہ زیادہ سے زیادہ سفر حج پر جانے کے خواہش مندافراد آن لائن درخواستیں روانہ کریں۔ اس کے لئے مرکزی حکومت آن لائن درخواست کے عمل کو نہایت آسان او قابل رسائی بنارہی ہے۔ نقوی نے کہا کہ حج2016میں ملک بھر کے 21مراکز سے99,903افراد نے حج کمیٹی آف انڈیا کے ذڑیعہ حج کی سعادت حاصل کی اور تقریباً36ہزار حاجیوں نے خانگی ٹور آپریٹر کے ذریعہ حج ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ حج2016ء کے دوران حاجیوں کی سہولیات کی نگرانی کے لئے وزارت اقلیتی امور کے عہدیداروں پر مشتمل ایک وفد سعودی عرب بھیجا گیا تھا جس نے عازمین کی سہولیات کے لئے باریکی سے جائزہ لیا اور اس پر عمل در آمد کو یقینی بنایا۔ مرکزی حکومت سفر حج کو بہتر سے بہتر اور آسان بنانے اور حاجیوں کو زیادہ سے زیادہ سہولتیں فراہم کرانے کے لئے عہد کے پابند ہیں۔ ہم نے تمام ریاستوں کے وزرائے اعلیٰ اور ممبران پارلیمنٹ کو حج سے متعلق تجاویز پیش کرنے کے لئے گزشتہ ہفتہ مکتوب ارسال کئے ہیں۔ نقوی نے کہا کہ وزارت اقلیتی امور آئندہ حج کے بہتر انتظامات کی تیاری میں ابھی سے مصروف ہوگئی ہیں۔ مکہک مگرمہ اور مدینہ منورہ میں حج کے دوران حاجیوں کو کسی بھی قسم کی پریشانی سے بچانے کے لئے حج کمیٹی آف انڈیا اور ریاستی حج کمیٹیوں کو ابھی سے عازمین کے لئے تربیتی کیمپوں کی منصوبہ بندی کرنی چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ وزارتی اقلیتی امور حاجیوں کی تربیت کے لئے10سے15منٹ کی ایک دستاویزی فلم تیار کرے گی جس میں عازمین کے لئے سفر حج سے متعلق تمام تفصیلات دستیاب ہوں گی۔ یہ دستاویزی فلم حاجیوں کے لئے منعقد کئے جانے والے ٹریننگ کیمپوں میں بھی دکھائی جائے گی۔ وزارت اقلیتی امور اس بات کے لئے خاطر خواہ اقدامات کررہی ہے کہ گزشتہ برس کی طرح آئندہ سال بھی حج خیر و عافیت اور امن و سکون کے ساتھ ادا کیاجاسکے گا۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ حج2016میں سعودی عرب کی حکومت نے سفر حج کو آسان بنانے میں حکومت ہند کے ساتھ کافی تعاون کیا ۔ ہم نے حج 2017کے لئے ملک بھر سے موصول ہونے والی مختلف تجاویز کی بنیاد پر سعودی حکومت اور حج سے متعلق ہندوستان کی ایجنسیوں سے بات چیت شروع کردی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریاستی حج کمیٹیاں مختلف ریاستوں سے حج پر جانے والے افراد کو حج کے سلسلے میں اور سفر حج کے دوران کیا کرنا چاہئے اور کن چیزوں سے گریز کرنا چاہئے، اس کی معلومات فراہم کرائیں تاکہ عازمین کو کسی طرح کی پریشانی کا سامنا نہ کرنا پڑے۔ نقوی نے کہا کہ سعودی حکومت کے سیکوریٹی قوانین ، رہائش اور ٹرانسپورٹیشن کے انتظامات پر سب کو عمل کرنا چاہئے تاکہ حج کے معاملات میں ہندوستانی عازمین بھی سعودی حکومت کے انتظامات میں تعاون کرسکیں۔

--

0 comments:

Post a Comment